Punjab highway patrol police

  

ہاں آج ہم اس پیج کے پر اب تو بتائیں گے کہ ہائی وے پولیس میں نئی آنے والی نوکریوں میں آپ نے کیسے اپلائی کرنا ہے اور اس کی کیا کیا ریکوائرمنٹس ہیں سے گورنمنٹ آف پاکستان نے پندرہ سو سے زیادہ پولیس ڈیپارٹمنٹ میں نوکریوں کا اعلان کردیا ہے ایسے تمام لوگ جو کہ پنجاب سے تعلق رکھتے ہیں اور انہوں نے نے میٹرک ملک یا انٹرمیڈیٹ کیا ہوا ہے وہ اس پولیس ڈیپارٹمنٹ میں آنے والی نئی نوکریوں کے لیے اپلائی کر سکتے ہیں کسی بھی قسم کی انفارمیشن درکار ہو تو آپ نے اس طریقے سے پڑھ لینا ہے ایسے ایسے لوگ جن کی عمریں 18 سے 25 سال کے درمیان ہے اور وہ وہ ایک شعر یہ چھ میٹر سات منٹ کے اندر فاصلہ کر سکتے ہیں وہ اس جاب کے لیے لازمی طور پر اپلائی کریں

Publish Date: Upcoming jobs

Last date: Upcoming

Newspaper: Daily Dawn Newspaper

Department Name: Punjab highway patrol police

Education: Matric, intermediate

Job Location:  Pakistan

No. of Vacancies: 1500+ Vacancies

Gender Required: Male / Female

Click Here: To Join Jobs Whatsapp Group

Click Here: روزانہ جوبز اور اپلائی کیلئے سبسکرائب کریں، بیل دبائیں✔️

FAQs For Apply!

Highway Police jobs Positions:

Constables

Driver constables

Constable police criteria:

Height for Male: 5′ 7″

Height for Female: 5′ 2″

Domicile: Male/Female 

Domicile of Punjab

Age limit: 18 to 25

Running: 1.6 Meter in 7 minutes for males


Meters for female

Position Name:

Constables

Driver constables

How to Apply For Highway Police jobs?

Apply Online

Required Documents:

جب آپ لوگ لوگ پنجاب ہائی وے پٹرولنگ پولیس کے لیے اپلائی کرنے کے لیے آئے تو اپنے تمام پردہ بھی ذات اپنے ہمراہ لے کر حاضر ہوں ہو دس تعویذات میں آپ اپنا قومی شناختی کارڈ اپنے والد کا قومی شناختی کارڈ اپنے تمام پر ڈگری کے اصل دستاویزات اور ان کی کاپیاں اور اس کے علاوہ اپنا ڈومیسائل اور بے فارم یہ تمام چیزیں لے کر آئے اور اسے دو دن کا الیکشن فارم مکمل نہیں ہوگا ان کو اس جواب کے لئے نااہل قرار دے دیا جائے گا

Address:

Punjab highway patrol police

Official Announcements:




Last Date To Apply: Upcoming

 



Subscribe via Email for Latest Jobs Updates

(Please Cheak Your Inbox For Daily New Jobs
Loading

More Jobs for You:

Leave a Comment